یسوع کی عوامی وزارت کی تیاری

______________________________________________________________

______________________________________________________________

یہ عمل یوحنا بپتسمہ دینے والے کے ظہور سے شروع ہوتا ہے، جو صحیفہ کے ذریعہ تصدیق شدہ خدا کا ایک رسول ہے۔ یوحنا یسوع کی طرف اشارہ کرتا ہے جس کے بپتسمہ پر خدا آسمان سے بولتا ہے، یسوع کو اپنا بیٹا قرار دیتا ہے۔ روح یسوع پر نازل ہوتی ہے جو آخرکار “روح القدس کے ساتھ” بپتسمہ دے گا۔

یسوع کی پیشکش شیطانی حملے پر اس کی فتح کے ساتھ اختتام پذیر ہوتی ہے۔

______________________________________________________________

باب 1

1 یسوع مسیح [خدا کا بیٹا] کی خوشخبری کا آغاز۔

یوحنا بپتسمہ دینے والے کی تبلیغ۔ 2 جیسا کہ یسعیاہ نبی میں لکھا ہے:

’’دیکھو، میں اپنے قاصد کو تمہارے آگے بھیج رہا ہوں۔

وہ تمہارا راستہ تیار کرے گا۔

3 بیابان میں پکارنے والے کیآواز:

‘رب کی راہ تیار کرو، اس کی راہیں سیدھی کرو۔‘‘

4 یوحنا بپتسمہ دینے والا صحرا میں نمودار ہوا اور گناہوں کی معافی کے لیے توبہ کے بپتسمہ کا اعلان کیا۔ 5 یہودیوں کے تمام دیہی علاقوں کے لوگ اور یروشلم کے تمام باشندے اس کے پاس جا رہے تھے اور اپنے گناہوں کا اعتراف کرتے ہوئے دریائے یردن میں اس سے بپتسمہ لے رہے تھے۔ 6 یوحنا اونٹ کے بالوں میں ملبوس تھا، اس کی کمر پر چمڑے کی پٹی تھی۔ اس نے ٹڈیاں اور جنگلی شہد کھلایا۔ 7 اور اُس نے یہ اعلان کیا: ”مجھ سے زیادہ طاقتور میرے بعد آنے والا ہے۔ میں اس لائق نہیں ہوں کہ جھک کر اس کی جوتی کی پتیاں کھولوں۔ 8 میں نے تمہیں پانی سے بپتسمہ دیا ہے۔ وہ تمہیں روح القدس سے بپتسمہ دے گا۔”

یسوع کا بپتسمہ۔ 9 ان دنوں ایسا ہوا کہ عیسیٰ گلیل کے ناصرت سے آیا اور یوحنا سے یردن میں بپتسمہ لیا۔ 10 پانی سے باہر آ کر اُس نے آسمان کو پھٹتے دیکھا اور روح کبوتر کی طرح اُس پر اُترتے ہوئے دیکھا۔ 11 اور آسمان سے آواز آئی، ”تم میرا پیارا بیٹا ہو۔ میں آپ سے بہت خوش ہوں۔”

عیسیٰ کا فتنہ۔ 12 روح نے فوراً ہی اُسے بیابان میں نکال دیا، 13 اور شیطان کی طرف سے آزمائش میں آ کر وہ چالیس دن تک صحرا میں رہا۔ وہ جنگلی درندوں میں سے تھا، اور فرشتے اس کی خدمت کرتے تھے۔

______________________________________________________________

This entry was posted in اردو and tagged . Bookmark the permalink.