مہربان باپ

______________________________________________________________

. . .

“زمین پر ہر ایک ذی روح جلد ہی ضمیر کی روشنی کے آثار دیکھے گی۔ ان میں سے ہر ایک شرم سے اپنے گھٹنوں کے بل جھک جائے گا جب وہ دیکھے گا، شاید پہلی بار، ان کے گناہ میری آنکھوں میں کتنے دردناک نظر آتے ہیں۔

نرم دل اور عاجزی کے ساتھ اس عظیم رحمت کو شکر اور راحت کے ساتھ قبول کریں گے۔ دوسروں کے لیے، وہ یہ بہت مشکل آزمائش پائیں گے اور بہت سے لوگ میرے پیار اور دوستی کے ہاتھ کو مسترد کر دیں گے۔

. . .

______________________________________________________________

This entry was posted in اردو and tagged . Bookmark the permalink.