علم: مافوق الفطرت معلومات

_______________________________________________________________

حکمت روح القدس کے مقاصد کے حصول کے لئے علم کا استعمال کرتی ہے۔ وہ ہمہ گیر ہے لیکن عیسائیوں کے پاس محدود اور نامکمل علم ہے اور وہ اس سے زیادہ نامکمل ہے۔ پھر بھی روح القدس ان ایمان داروں کو ایسی معلومات دے سکتی ہے جو وہ فطری طور پر کبھی حاصل نہیں کر سکتے تھے۔

مضمون روح القدس کے تحائف اور پھل ان کے پھلوں سے تصدیق کی تسبیح کے تحائف سے متعلق ہے اور خدا روح القدس کے پھلوں کی ترقی کے ذریعے ہماری حرمت کا خواہش مند ہے۔

ہم علم کو مقدس سے کرشماتی تک ترقی دے سکتے ہیں۔ مضمون کرشماتی علم کی ترقی ترقی کا احاطہ کرتا ہے۔

“اس نے ان سے کہا لیکن تم کون کہتے ہو کہ میں ہوں؟ شمعون پطرس نے جواب میں کہا کہ تم مسیح ہو جو زندہ خدا کا بیٹا ہے یسوع نے جواب میں اس سے کہا کہ تم مبارک ہو، شمعون یوناہ کا بیٹا۔ کیونکہ گوشت اور خون نے تم پر یہ بات نہیں نازل کی بلکہ میرے آسمانی باپ پر۔ اور میں تم سے کہتا ہوں کہ تم پطرس ہو اور اس چٹان پر میں اپنا چرچ بناؤ گا اور اس کے خلاف نیدرورلڈ کے دروازے غالب نہیں آئیں گے میں تمہیں آسمان کی بادشاہی کی چابیاں دوں گا۔ جو تم زمین پر باندھو گے وہ آسمان پر باندھا جائے گا اور جو کچھ تم باندھو گے وہ آسمان پر باندھا جائے گا اور جو کچھ تم نے باندھا ہے وہ آسمان اور جو کچھ تم زمین پر ڈھیلا ہو وہ آسمان میں ڈھیلا ہو جائے گا”۔ (متی 16:15-19)

روح القدس ہمیں عظیم مصیبت کے لئے تیار کرنے کا ارادہ رکھتی ہے جب بدروحیں بہت متحرک ہوں گی ۔ روح القدس، سکریمنٹس اور کنواری مریم میں پناہ مانگو۔ پوپ پیٹر دوم اس وقت چرچ کی قیادت کریں گے اور مسیح کو جنت سے اترتے ہوئے دیکھیں گے۔

“جب اس نے یہ کہا تھا، جب وہ دیکھ رہے تھے، اسے اٹھایا گیا اور ایک بادل نے اسے ان کی نظر بنا لیا۔ جب وہ جا رہے تھے تو آسمان کی طرف غور سے دیکھ رہے تھے کہ اچانک سفید لباس میں ملبوس دو افراد ان کے پاس کھڑے ہو گئے۔ انہوں نے کہا گلیل کے آدمی وہیں آسمان کی طرف کیوں دیکھ رہے ہو یہ یسوع جو تم سے آسمان میں اٹھایا گیا ہے اسی طرح واپس آئے گا جس طرح تم نے اسے جنت میں جاتے دیکھا ہے”۔ (اعمال 1:9-11)

_______________________________________________________________

This entry was posted in اردو and tagged . Bookmark the permalink.